006 - پیروں کی حفاظت تحریر : مینا

تحریر: مینا
پیروں کی حفاظت

یہ مثل تو سنی ہوگی کہ مور اپنے پیر دیکھ کر روتا ہے۔ اگر نہیں سنی تو اپنے پیروں پہ نظر دوڑائیں کہیں ایڑھیاں پھٹی ہوئی تو نہیں ہیں۔ ان میں کریکس تو نہیں۔ داغ دھبوں سے پاک تو ہیں۔ ٹک گئی نظر، کیا ہوا؟ فیشل کرتے ہوئے بے چاروں کو نظر انداز کر دیا گیا تھا نا!۔
ہمارے جسم کا وہ حصّہ جس پر سب سے زیادہ بوجھ ہوتا ہے اور جس کو سب سے زیادہ نظر انداز کیا جاتا ہے۔

چلیں اس کی بھی فکر تمام ہوئی۔ ایک ترکیب حاضر ہے جس کے بعد جو بھی دیکھے گا بے اختیار کہہ اٹھے گا انہیں زمین پر مت رکھو میلے ہو جائیں گے۔

۔ ایک کپ دودھ
۔ 4 ٹیبل اسپون چینی یا نمک
۔ 1/2 کپ آئل (آپ بے بی آئل، روغن بادام، روغن ناریل یہاں تک کہ ویجیٹیبل آئل بھی استعمال کر سکتے ہیں۔)
- ایک عدد جھانواں۔ Pumice stone
- اسٹرائیڈ پیڈز Stride pad (یہ کسی بھی ڈرگ اسٹور پر مل جاتے ہیں(
۔ ویزلین یا کوئی بھی موئسچرائزر
۔ سوکس
۔ شیمپو

پہلا اسٹیپ:
5 کپ نیم گرم پانی میں ایک کپ دودھ ملائیں پھر اس میں تھوڑا سا شیمپو شامل کریں۔ اور پانچ سے دس منٹ تک اپنے پیر اس میں ڈپ کر کے رکھیں۔

دوسرا اسٹیپ:
چار ٹیبل اسپون نمک/ چینی تیل میں ملائیں یہ سب چیزیں آرام سے گھر میں ہی مل جاتی ہیں۔ اب آپ کا گھریلو اسکرب تیار ہے۔ اب اس کو سرکولیشن موشن میں رگڑنا شروع کریں۔ خاص کر وہاں جہاں مردہ سیل ہوتے ہیں اور کھال کو سخت بنا کر ان پر دھبے ڈال دیتے ہیں۔ اور جہاں ضرورت ہو خاص کر ایڑھیوں پر تو وہاںPumice stone کا استعمال کریں۔۔ یہ آپ کے پاؤں کی جلد کو نرم کر دے گا۔

تیسرا اسٹیپ:
رات سونے سے قبل Stride pad اپنے پیروں پر رب کریں۔۔۔اس میں چونکہ 2٪ salicylic acid کی مقدار موجود ہوتی ہے کہ پیروں کے لیے مفید ہے۔
اس کے بعد موئسچرائزر/ ویزلن کی ایک دبیز تہہ لگائیں۔Stride pad پیروں سے الگ مت کیجیے گا اور پھر سوکس پہن لیں کم سے کم چار گھنٹوں کے لیے۔

http://fashionanyway.com/wp-content/uploads/2010/04/FEET-BEAUTY.jpg